42

اقوام متحدہ کے اجلاس میں مصنوعی ذہانت کے حامل روبوٹ کی شرکت عورت کی شکل میں بنائے گئے اس روبوٹ کو صوفیہ کا نام دیا گیا

روبوٹ نے کئی امور پر اقوام متحدہ کی ڈپٹی سیکرٹری جنرل امینہ محمد سے بات چیت بھی کی
نیویارک(یوا ین پی)اقوام متحدہ کے ٹیکنالوجی کے حوالے سے نیویارک میں منعقدہ اجلاس میں مصنوعی ذہانت کے حامل ایک روبوٹ نے شرکت کرکے سب کو حیران کر دیا۔ ہنسن روبوٹکس کے تیار کردہ روبوٹ نے کئی امور پر اقوام متحدہ کی ڈپٹی سیکریٹری جنرل امینہ محمد سے بات چیت بھی کی۔ایک عورت کی شکل میں بنائے گئے اس روبوٹ کو صوفیہ کا نام دیا گیا ہے۔ صوفیہ اس سے قبل دنیا کے مختلف ملکوں میں ٹی وی چینلوں کو انٹرویوز دے چکی ہے اور ایک کنسرٹ میں بھی پرفارم کر چکی ہے۔ اقوام متحدہ کے اجلاس میں اس کی شرکت سب کیلئے خوشگوار حیرت کا باعث بنی۔ڈپٹی سیکرٹری جنرل سے بات چیت میں صوفیہ نے سائنس فکشن کے معروف ناول نگار ولیم گبسن کی کتاب میں اس کا حوالہ پیش کیا اور کہا کہ آپ سب مستقبل میں جھانک رہے ہیں، صرف وسائل کی تقسیم مساوی نظر نہیں آ رہی۔صوفیہ کا کہنا تھا کہ اگر ہم ذہین بننا چاہتے ہیں اور کامیابی کو چھونا چاہتے ہیں تو ہمیں مصنوعی ذہانت کو استعمال کرتے ہوئے وسائل کی مساوی تقسیم کرنا ہوگی اور خوراک و توانائی کے وسائل کی مساوی تقسیم کیلئے روبوٹس انسانوں کی مدد کر سکتے ہیں۔

Facebook Comments

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں